حوثی باغیوں کے حملے علاقائی امن و سلامتی کیلئے شدید خطرہ ہیں، وزیر اعظم عمران خان

وزیر اعظم عمران خان نے ابوظبی کے ولی عہد محمد بن زید النہیان سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ حوثی باغیوں کے حملے علاقائی امن و سلامتی کیلئے شدید خطرہ ہیں۔

وزیر اعظم آفس سے جاری کردہ بیان کے مطابق عمران خان نے متحدہ عرب امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر محمد بن زید النہیان کو ٹیلی فون کیا اور 17 جنوری کو شہری سہولیات کے مرکز پر حوثی باغیوں کے گھناؤنے دہشت گردانہ حملے کی شدیدمذمت کی۔

انہوں نے متحدہ عرب امارات کی قیادت، حکومت اور عوام کے ساتھ بھرپور یکجہتی کا اظہار کیا۔

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ ایسے حملوں کا کوئی جواز نہیں اور ایسے حملوں کو فوری روکے جانے کی ضرورت ہے جو علاقائی امن و سلامتی کے لیے شدید خطرہ ہیں۔

انہوں نے اس حملے کے متاثرین کے اہل خانہ سے اظہار تعزیت کیا اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعا بھی کی۔

ولی عہد محمد بن زید النہیان نے وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے بھرپور حمایت کے اظہار پر ان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے اس المناک واقعے میں جاں بحق ہونے والے پاکستانی شہری کے انتقال پر تعزیت کا اظہار بھی کیا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھی اپنے اماراتی ہم منصب شیخ عبداللہ بن زید النہیان سے بات کرتے ہوئے ابوظبی کے ‘شہری علاقوں پر گھناؤنے دہشت گرد حملے’ کی شدید مذمت کی تھی۔

یہ بھی چیک کریں

آئی ایم ایف پاکستان کی نئی حکومت کے ساتھ کام کرنے پر آمادہ

عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے پاکستان کی نئی منتخب حکومت کے ساتھ کام …