پیٹرول اور ڈیزل آج مہنگا ہونے کا امکان

اسلام آباد: نگران حکومت 16 فروری 2024 سے شروع ہونے والے اگلے 15 دن کے لیے ایکسچینج ایڈجسٹمنٹ کے بعد پیٹرول اور ڈیزل کی قیمت میں اضافہ کر سکتی ہے۔

سرکاری ذرائع نے دی نیوز کو بتایا کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اہم اضافہ بحیرہ احمر میں تیل کے جہازوں اور دیگر بحری جہازوں کی نقل و حرکت پر حوثیوں کے مسلسل حملوں کی وجہ سے خوفناک صورتحال ہے۔

تاہم، ایکسچینج ایڈجسٹمنٹ کے بغیر پیٹرول کی قیمت میں 1.97 روپے فی لیٹر اضافے کا امکان ہے جس کی ایکس ڈپو سیل قیمت 272.89 روپے فی لیٹر سے بڑھ کر 274.86 روپے فی لیٹر ہو جائے گی۔

اسی طرح بغیر ایکسچینج ایڈجسٹمنٹ کے ڈیزل کی قیمت 9.20 روپے فی لیٹر اضافے سے 278.96 روپے سے بڑھ کر 288.16 روپے فی لیٹر ہونے کا امکان ہے۔

مٹی کے تیل کی قیمت بھی 1.57 روپے فی لیٹر اضافے کے ساتھ 186.62 روپے فی لیٹر سے بڑھ کر 188.19 روپے فی لیٹر ہونے کا امکان ہے اگر ڈالر اور روپے کے تبادلے کو ایڈجسٹ نہ کیا گیا۔ 

سرکاری ذرائع کا بتانا ہے کہ ایکسچینج ایڈجسٹمنٹ کے بعد نگران حکومت پیٹرول کی قیمت میں 1.47 روپے فی لیٹر اور ہائی اسپیڈ ڈیزل (ایچ ایس ڈی)کی قیمت میں 7.50 روپے فی لیٹر  کا اضافہ کر سکتی ہے۔

یہ ویڈیوز بھی دیکھیں:

یہ بھی چیک کریں

پاکستان کی معاشی ترقی تیز ہورہی ہے اور مہنگائی میں کمی کا امکان ہے: یو این اکنامک سروے جاری

اقوام متحدہ نے اقتصادی سروے جاری کردیا جس میں پاکستان کی معاشی ترقی میں تیزی …