سید علی گیلانی کی وفات، آزاد کشمیر میں تین روزہ سوگ کا اعلان

مظفر آباد: آزاد کشمیر حکومت نے سینئر کشمیری حریت پسند رہنما سید علی گیلانی کی وفات پر وادی میں 3 روزہ سوگ کا اعلان کیا کیا ہے جبکہ وادی کے تمام ضلعی ہیڈ کوارٹرز میں ان کی غائبانہ نماز جنازہ بھی ادا کی جائے گی۔ 

وزیراعظم آزادکشمیر عبد القیوم نیازی نے سید علی گیلانی کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ علی گیلانی کی رحلت کا سن کر دل رنجیدہ ہے۔ سید علی گیلانی تحریک آزدای کشمیر کے روح رواں تھے جنہوں نے بھارتی ظلم و جبرکا دلیری کےساتھ مقابلہ کیا، ان کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی۔

ترجمان وزیراعظم آزاد کشمیر کے مطابق سیدعلی گیلانی کی وفات پر ایک روز کی عام تعطیل ہو گی اور آزادی کشمیر کے تمام ضلعی ہیڈکوارٹرز میں ان کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کی جائے گی۔ 

واضح رہے کہ سید علی گیلانی گزشتہ روز طویل علالت کے بعد سرینگر میں انتقال کر گئے تھے۔ وہ 29 ستمبر 1929 کو پیدا ہوئے اور جماعت اسلامی مقبوضہ جموں و کشمیر کے رکن بھی رہے اور پھر تحریک حریت کے نام سے اپنی جماعت بنائی۔ 

سید علی گیلانی آل پارٹیز حریت کانفرنس کے چیئرمین بھی رہے اور جموں و کشمیر میں بھارتی قبضے کے خلاف مظلوم کشمیریوں کی طاقتور آواز بنے، گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے بھی سید علی گیلانی کے انتقال پر ایک روزہ سوگ اور پرچم سرنگوں رکھنے کا اعلان کیا تھا۔

یہ بھی چیک کریں

نگران حکومت کے عوام کو جھٹکے، بجلی مزید مہنگی کرنے کی تیاری

لاہور: مہنگائی کی چکی میں پسے عوام پر ایک اور بجلی بم گرانے کی تیاری …