گردشی قرضہ کم کرنے کیلئے نندی پور، گڈو پاور پلانٹ پی ایس او کو دینے کا فیصلہ

اسلام آباد: گیس سیکٹر کا گردشی قرضہ کم کرنے کیلئے نندی پور اور گڈو پاور پلانٹ کو پی ایس او کو دینے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

ذرائع وزارت توانائی کے مطابق نندی پور پاور پلانٹ اور گڈو پاور پلانٹ کی نجکاری منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور گیس سیکٹر کے گردشی قرضہ میں کمی کیلئے دونوں پاور پلانٹس کے شیئرز پی ایس او کو دینے کی تجویز دی گئی ہے۔

پاور پلانٹس کے شیئرز پی ایس او کو ملنے سے گیس سیکٹر کا 100 ارب روپے گردشی قرضہ کم ہو گا کیونکہ نندی پور اور گڈو پاور پلانٹس سوئی گیس کمپنیوں کے 100 ارب روپے کے نادہندہ ہیں۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ دونوں پاور پلانٹس کے 100 ارب کے کنٹرولنگ سٹیک پی ایس او کو دیئے جائیں گے، نندی پور اور گڈو پاور پلانٹ کو نجکاری فہرست سے نکالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع وزارت توانائی کے مطابق پاور پلانٹس کے شیئرز سے وفاقی حکومت سوئی گیس کمپنیوں کے واجبات کلیئر کرائے گی۔

پاور پلانٹس کو نجکاری فہرست سے نکالنے کیلئے وزارت توانائی، پٹرولیم اور نجکاری کمیشن رضا مند ہو گئے ہیں جبکہ پاور پلانٹس کو نجکاری فہرست سے نکالنے کیلئے حتمی منظوری وفاقی کابینہ سے مشروط ہے۔

یہ وڈیوز بھی دیکھیں:

یہ بھی چیک کریں

نگران حکومت نے مالی سال کے پہلے 7 ماہ میں 6.3 ارب ڈالر حاصل کرلیے

اسلام آباد: سعودی تیل کی سہولت کی بحالی کے بغیر جنوری 2024 میں پاکستان نے …